More share buttons
اپنے دوستوں کے ساتھ اشتراک کریں

پیغام بھیجیں
icon تابی لیکس
Latest news
بریکنگ ۔۔ بریکنگ ۔۔ پاکستان کرکٹ بورڈ ایک اور مشکل ميں پڑگيا ڈپارٹمنٹ کرکٹ کیوں بحال نہیں کی ؟ کرکٹ کميٹی کے سربراہ اقبال قاسم بورڈ پر برہم ، ذرائع کرکٹ کميٹی سربراہ بورڈ سے ناراض ، کام کرنے سے انکار کردیا ، ذرائع عہدہ چھوڑ رہا ہوں ، اقبال قاسم نے بورڈ کو آگاہ کرديا ، ذرائع اقبال قاسم کا چيئرمين احسان مانی سے رابطہ نہ ہوسکا ، ذرائع کرکٹ کميٹی کے چيئرمين نے ذاکر خان کو فون پر مطلع کيا اقبال قاسم نے کام جاری نہ رکھنے کی ای ميل بورڈ کو کردی ہم اس سے زیادہ سکور کرسکتے تھے، یونس خان لاہور: وکٹیں ہماری ہاتھ میں تھی 200 سے زیادہ سکور ہوتا تو بہت اچھا تھا، یونس خان لاہور: انگلینڈ نے بہترین بلے بازی کی، یونس خان لاہور: ہمارے باولر انڈر پریشر آگئے، یونس خان لاہور: اظہر نروس ہوتے تھے کہ میری ٹانگ پر گیند نہ لگے، یونس خان لاہور: میں نے صرف ان کا ٹاپ ہینڈ درست کروایا، یونس خان لاہور: کوچنگ میں یہ ضروری ہوتا ک کھلاڑی آپ پر بھروسہ کرے، یونس خان لاہور: میں نے اظہر کو سمجھایا، اس نے عملدرآمد کیا، یونس خان لاہور: بابراعظم کافی عرصہ سے کپتانی کررہا ہے، یونس خان لاہور: ڈریسنگ روم میں ہرکوئی اپنی اپنی آراں دیتا ہے، یونس خان لاہور: کپتان کو اپنے اوپر اعتماد ہونا چاہیے، یونس خان لاہور: کپتان کو اپنے فیصلے خود کرنے چاہیے، یونس خان لاہور: ڈرنا نہیں چاہیے، فیصلے غلط بھی ہوجائے تو کوئی بات نہیں، یونس خان لاہور: ڈائری ہمیشہ اپنے ساتھ رکھتا ہوں، یونس خان لاہور: اپنے آپ کو مصروف رکھنے کیلئے ڈائری لکھتا ہوں، یونس خان لاہور: میں نے اپنے آپ کو کافی تبدیل کیا ہے، یونس خان لاہور: محمد حفیظ کے ساتھ بہت کام کیا ہے، یونس خان لاہور: گالف کھیلتے وقت بھی اسکو ایڈوائز کرتا رہا، یونس خان لاہور: میں تو یاسر شاہ کے بال بھی بناتا رہا ، یونس خان لاہور: مرحوم کوچ باب وولمر میرے ساتھ ایسا کرتے تھے، یونس خان لاہور: باب وولمر میرے لیے باپ جیسے تھے، یونس خان لاہور: کھلاڑیوں کے ساتھ گھل مل جانے سے آپ اسکی خامیوں پر کام کرسکتے ہیں، یونس خان لاہور: ہم اس سے زیادہ سکور کرسکتے تھے، یونس خان لاہور: وکٹیں ہماری ہاتھ میں تھی 200 سے زیادہ سکور ہوتا تو بہت اچھا تھا، یونس خان لاہور: انگلینڈ نے بہترین بلے بازی کی، یونس خان لاہور: ہمارے باولر انڈر پریشر آگئے، یونس خان یٹنگ کوچ قومی کرکٹ ٹیم یونس خان کی ویڈیو لنک پریس کانفرنس لاہور: دو ماہ ہوگئے ہیں انگلینڈ آئے ہوئے، یونس خان لاہور: دن رات محنت کی ہے، یونس خان لاہور: بلے بازوں کے ساتھ کام کیا، یونس خان لاہور: باولرز کو وقت دیا ہے، یونس خان لاہور: اس دوران مشکل وقت میں بھی بڑا تعاون کیا، یونس خان لاہور: شان مسعود اور اظہر علی نے اچھی بلے بازی کی، یونس خان لاہور: بابر اعظم نے ففٹی سکسٹی کرتے رہے، یونس خان لاہور: محمد رضوان کی پرفارمنس سے بہت خوشی ہوئی، یونس خان لاہور: کل کا ٹی ٹوئنٹی میچ ہم نے بہت اچھا کھیلا، یونس خان لاہور: ہمارے 10 سے 15 رنز کم رہ گئے، یونس خان لاہور: مجھے کافی مثبت چیزیں نظر آرہی ہے، یونس خان محمد عامر کی ہمت 2 اوورز بعد ہی جواب دے گئی بابراعظم دوسرے میچ میں اچھے ٹوٹل کے باوجود شکست پر مایوس راشد لطیف کو رضوان میں مستقبل کے کپتان کی جھلک نظر آنے لگی محمد عامر انجری محمد عامر دوسرے ٹی ٹونٹی کے دوران ہیمسٹرنگ انجری کا شکار ہوئے محمد عامر کی ہیمسٹرنگ انجری کا جائزہ لیا جائے رہا ہے ۔ پی سی بی محمد عامر کی انجری کی نوعیت کے بارے کچھ بھی کہنا قبل ازوقت ہو گا۔ پی سی بی محمد عامر کو ابتدائی طبی سہولیات فراہم کی جا رہی ہیں ۔ پی سی بی ٹی ٹوئنٹی کپتان بابر اعظم / سمرسیٹ معاہدہ لاہور۔ کپتان قومی ٹی ٹوئنٹی کرکٹ ٹیم بابر اعظم کا سمرسیٹ کاونٹی سے معاہدہ طے پاگیا لاہور۔ پی سی بی نے بابر اعظم کو انگلینڈ ڈومیسٹک ٹی ٹوئنٹی کپ میں کھیلنے کی اجازت دے دی لاہور۔ بابر اعظم دورہ انگلینڈ کے فوری بعد سمر سیٹ کاونٹی کو جوائن کرینگے لاہور۔ بابر اعظم 2 ستمبر سے 4 اکتوبر تک سمرسیٹ کی نمائندگی کرینگے لاہور۔ بابر اعظم لیگ کے آخری 7 میچز اور ناک آوٹ راونڈ کے لئے دستیاب ہونگے لاہور۔ پچھلے سال کی نسبت یہ سال کھیل کے لئے مختلف ہے، بابر اعظم لاہور۔ ہمیں اس بدلتی صورتحال میں اپنے آپ کو ڈھالنا ہوگا، بابر اعظم لاہور۔ میں بہت شکرگزار ہوں کے ہم سب نے ملکر کھیل کو دوبارہ آباد کیا، بابر اعظم ٹیسٹ کپتان اظہر علی انگلش باؤلرز کو ہوم کنڈیشنز میں باؤلنگ کا تجربہ ہے نسیم شاہ اور شاہین شاہ افریدی ابھی فرسٹ کلاس کرکٹ ذیادہ نہیں کھیلے محمد عباس انگلش کنڈیشنز میں باؤلنگ کا تجربہ رکھتے ہیں دبئی میں بغیر شائقین کے بہت عرصہ کھیلا انگلینڈ میں پاکستانی شائقین بیت آتے ہیں ان کو کافی یاد کیا شائقین کے نہ ہونے سے کارکردگی متاثر نہیں ہوئی

پی ایس ایل کے لیے ٹیموں کا حتمی اعلان

پی ایس ایل کے لیے ٹیموں کا حتمی اعلان

فرنچائز مالکان کا ایچ بی ایل پاکستان سپر لیگ 2020 میں شامل اسکواڈز پر اظہار خیال

• اسلام آباد یونائیٹڈ نے “دماغ سے” حکمت عملی کے تحت بہترین کھلاڑیوں کا انتخاب کیا، علی نقوی
• متوازی اسکواڈ کا انتخاب کیا، اعزاز کا دفاع کریں گے، ندیم عمر
• کھلاڑیوں کا انتخاب کرنا محمد اکرم کی ذمہ داری ہے اور ہم ان کے فیصلوں پر فخر کرتے ہیں، جاوید آفریدی
• ڈرافٹ کے دوران کراچی کنگز کا فلسفہ، ٹیم کے اہم ترین کھلاڑیوں کو اسکواڈ میں برقرار رکھنا تھا، سلمان اقبال
• حارث رؤف کے بعد لاہور قلندرز اپنا پلیٹ فارم دلبر حسین اور فرزان راجہ جیسے باصلاحیت کھلاڑیوں کو فراہم کررہا ہے، عاطف رانا
• محمد الیاس، روحیل نذیر، علی شفیق اور خوشدل شاہ کی اسکواڈ میں شمولیت پر بہت پرجوش ہوں، عالمگیر ترین

لاہور،11 فروری2020ء:

ایچ بی ایل پاکستان سپر لیگ 2020 کے آغاز میں صرف 9 روز باقی رہ گئے ہیں۔ جوں جوں ایونٹ کے آغاز کا وقت قریب آرہا ہے توں توں لیگ سے جڑے ہر اسٹیک ہولڈر کی خوشی میں اضافہ ہوتا جارہا ہے۔

ایک طرف تو کرکٹ کے مداح سماجی رابطے کی ویب سائٹس پر لیگ میں شامل تمام ٹیموں پر مشتمل اپنی متوقع پلیئنگ الیونز کا اعلان کررہے ہیں تو دوسری طرف فرنچائز مالکان کا بھی اس حوالے سے جوش و خروش دیدنی ہے۔

پہلی مرتبہ لیگ کے مکمل ایڈیشن کا پاکستان میں انعقاد، تمام فرنچائز مالکان کے لیے خوشی کا سبب ہے۔ یہی وجہ ہے کہ انہوں نے دسمبر میں پلیئر ڈرافٹ اور چند روز قبل ریپلیسمنٹ ڈرافٹ کے ذریعے بہترین کھلاڑیوں کا انتخاب کیا ہے۔

اس حوالے سے تمام فرنچائز مالکان کی آراء مندرجہ ذیل ہے:

علی نقوی، مالک اسلام آباد یونائیٹڈ(2 مرتبہ کی چیمپئن):

اسلام آباد یونائیٹڈ کے مالک علی نقوی کا کہنا ہے کہ گذشتہ ایڈیشنز کی طرح ایچ بی ایل پی ایس ایل فائیو میں بھی اسلام آباد یونائیٹڈ کا اسکواڈ متوازی ہے۔انہوں نےکہا کہ ڈرافٹ کے دوران اسلام آباد یونائیٹڈ نے”دماغ سے” حکمت عملی کے تحت فرنچائز کے لیے بہترین کھلاڑیوں کا انتخاب کیا ہے۔

علی نقوی نے کہاکہ اسلام آبادیونائیٹڈ ڈرافٹ کے لیے مقررہ اہداف حاصل کرنے میں کامیاب رہی ہے۔ انہوں نے کہاکہ ڈیل اسٹین جیسے سینئر فاسٹ باؤلر کی موجودگی میں عاکف جاوید اور موسیٰ خان کے لیے ایچ بی ایل پی ایس ایل 2020 بہترین تجربہ ثابت ہوگی۔

انہوں نے مزید کہا کہ لیگ کی ایمرجنگ کٹیگری ہمیشہ ان کی ترجیح رہی ہے اور موجودہ ایڈیشن کے کپتان شاداب خان اس کی واضح مثال ہیں۔ انہوں نے کہاکہ جس طرح ایچ بی ایل پی ایس ایل 2 میں شاداب خان کو ایمرجنگ کٹیگری میں منتخب کیا گیا تھااسی طرح وہ ایڈیشن 2020 کے لیے عاکف جاوید اور احمد صفی عبداللہ کے انتخاب پر بہت پرجوش ہیں۔

اسکواڈ:

شاداب خان(کپتان)، ڈیل اسٹین، کولن انگرام، کولن منرو، فہیم اشرف، آصف علی،رومان رئیس، لیوک رونکی، حسین طلعت، فل سالٹ، ظفر گوہر، عماد بٹ، رضوان حسین، موسیٰ خان، عاکف جاوید، احمد صفی عبداللہ، سیف بدراورڈیوڈ ملان۔

ندیم عمر، کوئٹہ گلیڈی ایٹرز(دفاعی چیمپئن):

کوئٹہ گلیڈی ایٹرز کے مالک ندیم عمر کا کہنا ہے کہ وہ مجموعی طور پر اسکواڈ کے انتخاب پر خوش ہیں۔انہوں نے کہاکہ جیسن رائے اور بین کٹنگ کا گلیڈی ایٹرز فیملی کا حصہ بننا اور فواد احمد کا اسکواڈ میں برقرار رہنا فرنچائز کے لیے مفید ثابت ہوگا۔

ندیم عمر نے کہاکہ آرش علی خان اور اعظم خان جیسے نوجوان کرکٹرز مستقبل میں پاکستان کرکٹ کا اثاثہ ثابت ہوں گے، وہ پرامید ہیں کہ دونوں کھلاڑی ایونٹ میں متاثر کن کارکردگی کا مظاہرہ کریں گے۔

انہوں نے مزید کہا کہ گذشتہ ایڈیشن کی طرح لیگ کے پانچویں ایڈیشن میں کوئٹہ گلیڈی ایٹرز کی ٹیم بہترین کھلاڑیوں پر مشتمل ہے۔ انہیں امید ہےکہ اسکواڈ میں شامل تمام کھلاڑی ایونٹ میں اعزاز کا دفاع کرنے کے لیے سردھڑ کی بازی لگادیں گے۔

اسکواڈ:

سرفراز احمد (کپتان)، جیسن رائے، محمد نواز، بین کٹنگ، شین واٹسن، احمد شہزاد، فواد احمد، عمر اکمل، محمد حسنین، سہیل خان، ٹائمل ملز، عبدالناصر، نسیم شاہ، احسان علی، آرش علی خان، اعظم خان، کیمو پاؤل، خرم منظوراور زاہد محمود۔

جاوید آفریدی، مالک پشاور زلمی(2017 ایڈیشن کی چیمپئن):

پشاورزلمی کے مالک جاوید آفریدی کاکہنا ہےکہ ایچ بی ایل پی ایس ایل فائیو کے لیے ڈرافٹنگ کا عمل ان کی فرنچائز کے لیے بہترین ثابت ہوا۔ جاوید آفریدی نے کہاکہ پشاور زلمی کو بیشتر راؤنڈز میں پہلی پک نہیں ملی مگر وہ منتخب کردہ اسکواڈ پر مطمئن ہیں۔ انہوں نے کہاکہ ڈرافٹ میں کھلاڑیوں کا انتخاب کرنا محمد اکرم کی ذمہ داری ہے اور وہ ہمیشہ اپنی ذمہ داریاں احسن انداز میں نبھاتے ہیں۔جاوید آفریدی نے کہاکہ وہ شدت سے ایونٹ کے آغاز کاانتظار کررہے ہیں۔

جاوید آفریدی نے کہا کہ پشاور زلمی کا اسکواڈ ہمیشہ سے نوجوان اور تجربہ کار کھلاڑیوں پر مشتمل ہوتا ہے۔ انہوں نے کہاکہ حسن علی، ابتسام شیخ اور ثمین گل کا ابتدائی طور پر انتخاب ایمرجنگ کٹیگری میں کیا گیا تھا تاہم ان تینوں کھلاڑیوں کی کارکردگی سب کے سامنے ہے۔ انہوں نے مزید کہا کہ لیگ کے پانچویں ایڈیشن میں حیدر علی، عامر خان اور محمد محسن جیسے نوجوان کھلاڑیوں کی کارکردگی دیکھنے کے لائق ہوگی۔

پشاور زلمی کے مالک کا کہنا ہےکہ وہ اسکواڈ میں شامل زیادہ تر کھلاڑیوں کو برقرار رکھنے پر بہت خوش ہیں۔ انہوں نے کہاکہ لیام ڈاسن اور لیام لیونگ اسٹون کی اسکواڈ میں شمولیت خوش آئند ہے۔ جاوید آفریدی نے کہاکہ وہ ٹام بنٹن کے انتخاب پر بہت پرجوش ہیں، ٹام بنٹن نے حال ہی میں بگ بیش لیگ میں برسبین ہیٹ کی جانب سے شاندار کارکردگی کا مظاہرہ کیاہے۔

اسکواڈ:

وہاب ریاض، حسن علی، کیرون پولارڈ، ٹام بنٹن، شعیب ملک، کامران اکمل، لیام ڈاسن، ڈیرن سیمی، امام الحق، محمد محسن، راحت علی، لوئس گریگری، عادل امین، عمر امین، عامر خان، عامر علی، لیام لیونگ اسٹون، حیدر علی اور کارلوس بریتھ ویٹ۔

سلمان اقبال، مالک کراچی کنگز:

کراچی کنگز کے مالک سلمان اقبال کاکہنا ہےکہ وہ اور فرنچائز کی ساری انتظامیہ ایچ بی ایل پی ایس ایل 2020 کے لیے منتخب کردہ اسکواڈ سے مطمئن ہے۔ انہوں نے کہاکہ لیگ کے پانچویں ایڈیشن کے لیے اسکواڈ کا انتخاب کرتے وقت بنیادی فلسفہ اپنایا گیا اور وہ یہ کہ اہم ترین اراکین کو اسکواڈ میں برقرار رکھا جائے جو فرنچائز کے لیے سودمند ہوگا۔

سلمان اقبال نے کہاکہ وہ بابراعظم، ایلکس ہیلز، شرجیل خان اور کیمرون ڈیلپورٹ کی موجودگی میں بہترین ٹاپ آرڈر کے انتخاب پر بہت مسرور ہیں۔ انہوں نے کہاکہ وہ شرجیل خان کی لیگ میں واپسی پر بہت پرجوش ہیں۔

کراچی کنگز کے مالک نے کہاکہ محمد عامر،کرس جارڈن، علی خان، مچل میکلنگن اورعامر یامین پر مشتمل فاسٹ باؤلنگ اٹیک جبکہ عماد وسیم، عمر خان، اسامہ میر جیسے اسپن باؤلرز کے انتخاب کے باعث وہ ایونٹ میں عمدہ کارکردگی کی امید رکھتے ہیں۔

سلمان اقبال نے کہاکہ وہ مقامی ٹیلنٹ کے بہت بڑے معترف ہیں اور وہ پاکستان کے نوجوانوں کا ٹیلنٹ دنیا بھر کے سامنے پیش کرنے کی کوشش کرتے ہیں، عمر خان اور ارشد اقبال اس کی تازہ مثالیں ہیں۔ کراچی کنگز کے مالک کا کہنا ہے کہ وہ بطور کرکٹ مداح،ایڈیشن فائیو میں عاکف جاوید،روحیل نذیر اور عامر خان جیسے نوجوان کھلاڑیوں کو ایکشن میں دیکھنے کے منتظر ہیں۔

اسکواڈ:

عماد وسیم(کپتان)، ایلکس ہیلز، بابراعظم، محمد عامر، کرس جارڈن، افتخار احمد، شرجیل خان، کیمرون ڈیلپورٹ، مچل میکلنگن، اویس ضیاء، عامر یامین، محمد رضوان، عمید آصف، چیڈوک والٹن، علی خان، اسامہ میر، ارشد اقبال اور عمر خان۔

عاطف رانا، سی ای او لاہور قلندرز:

لاہور قلندرز کے چیف ایگزیکٹو آفیسر عاطف رانا کاکہنا ہےکہ پوری قوم کی طرح لاہور قلندرز بھی ایچ بی ایل پی ایس ایل فائیو کے آغاز کے لیے پرجوش ہے۔انہوں نے کہاکہ لیگ کے پانچویں ایڈیشن کے لیے لاہور قلندرز اپنے من پسند کھلاڑیوں کو ری ٹین اور پک کرنے میں کامیاب رہا ہے۔

عاطف رانا نے کہاکہ اسکواڈ میں باصلاحیت قومی اور بہترین غیرملکی کھلاڑی شامل ہیں۔ انہوں نے کہاکہ لاہور قلندرز ہمیشہ نوجوان کھلاڑیوں کی پذیرائی کے لیے کوشاں رہتی ہے۔ عاطف رانا کاکہنا ہےکہ فاسٹ باؤلر حارث رؤف کی پاکستان کرکٹ ٹیم میں شمولیت کے بعدلاہور قلندرز اب دلبر حسین اور فرزان راجہ کو شاندار کارکردگی کا مظاہرہ کرنے کے لیے ایک بہترین پلیٹ فارم فراہم کررہا ہے۔

اسکواڈ:

سہیل اختر (کپتان)، کرس لین، محمد حفیظ، فخر زمان، ڈیوڈ ویزے، شاہین شاہ آفریدی، عثمان شنواری، سمت پٹیل، حارث رؤف، سیکوگے پرسنا، بین ڈنک، فرزان راجہ، جاہد علی، سلمان بٹ، محمد فیضان، دلبر حسین اور ڈین ولاز۔

عالمگیر ترین، ملتان سلطانز:

ملتان سلطانز کےمشترکہ مالک عالمگیر ترین نے کہاانہیں خوشی ہے کہ تھنک ٹینک کی جانب سے جن کھلاڑیوں کی نشاندہی کی گئی تھی آج وہ سب ملتان سلطانز کے اسکواڈ کا حصہ ہیں۔انہوں نے واضح کیا کہ ایچ بی ایل پی ایس ایل 2020 کے لیے ملتان سلطانز کااسکواڈ معیاری ہے اور وہ ایونٹ میں بہترین نتائج کے لیے پرعزم ہیں۔

عالمگیر ترین کا کہنا ہےکہ وہ ملتان سلطانز میں شامل تمام ایمرجنگ اور نوجوان کھلاڑیوں کے حوالے سے بہت پرجوش ہیں۔ انہوں نے کہاکہ محمد الیاس نے گذشتہ ایڈیشن میں شاندار کارکردگی کا مظاہرہ کیا تھا جبکہ روحیل نذیر کی نمایاں کارکردگی سب کے سامنے ہے، روحیل نذیر نے جس انداز میں پاکستان انڈر 19 اور ایمرجنگ ٹیم کی قیادت کی وہ اس بات کی عکاسی ہےکہ وکٹ کیپر بیٹسمین پاکستان کرکٹ کا اثاثہ ہیں۔

انہوں نے مزید کہا کہ علی شفیق کا شمار بھی باصلاحیت کرکٹرز میں ہوتا ہے۔ ڈیبیو میں اسلام آباد یونائیٹڈ کے خلاف ان کی کارکردگی بہترین رہی۔ عالمگیر ترین نے کہا کہ مڈل آرڈر بیٹسمین خوشدل شاہ کی جارحانہ بیٹنگ ملتان سلطانز کے لیے اہم ثابت ہوگی۔

اسکواڈ:

شان مسعود (کپتان)، شاہد آفریدی، معین علی، رائیلی روسو، محمد عرفان، ذیشان اشرف، روی بوپارہ، سہیل تنویر، جنید خان، جیمز ونس، خوشدل شاہ، عثمان قادر، فابیئن ایلن، علی شفیق، روحیل نذیر، محمد الیاس، عمران طاہر، وائن میڈسن، اور بلاول بھٹی۔

20 فروری سے 22 مارچ تک جاری رہنے والےٹورنامنٹ میں کل34 میچز کھیلے جائیں گے۔ ٹورنامنٹ کا افتتاحی میچ کوئٹہ گلیڈی ایٹرز اور اسلام آباد یونائیٹڈ کے مابین نیشنل اسٹیڈیم کراچی میں کھیلا جائے گا۔

adds

اپنی رائے کا اظہار کریں